اوول کا کامیاب شو اور ورلڈ ٹی 20،آئی سی سی اورآسٹریلیا میں کیا ہوتا رہا

عمران عثمانی

انگلینڈ میں 136روزہ لاک ڈائون کے عملی خاتمہ کا مظاہر ہ کرکٹ میدان میں  اتوار کو کامیاب انداز میں ہوگیا جب لندن اوول کرکٹ گرائونڈ میں ایک دوستانہ میچ میں 1000ممبرز تماشائیوں نےسوشل فاصلے کے ساتھ میچ دیکھا۔
پہلے دن سرے کی ٹیم 335 رنز بناکر آئوٹ ہوگئی،سٹوک بوتھوٹ نے 87کی اننگ کھیلی،مڈل سیکس کے تمام بائولرز ہی 2،2 یا ایک ایک وکٹ لینے میں کامیاب رہے۔
کرکٹ تماشائیوں کی پہلی مرتبہ آمد،اوول آباد ،بریکنگ نیوز
میچ کے دوران اوول میں میوزک،شور شرابہ عروج پر تھا،انگلینڈ اور ویسٹ انڈیز کا ٹیسٹ میچ اولڈ ٹریفورڈ میں جاری تھا لیکن اوول کے گرائونڈ کو دیکھ کر لگتا تھا کہ جیسے یہاں ٹیسٹ میچ کھیلا جارہا ہو۔یہ موجودہ سیزن کا پہلا کامیاب تجربہ تھا،پیر کو میچ کے دوسرے دن بھی گرائونڈ میں 1000نئے ممبرز آئیں گے،انگلینڈ کرکٹ بورڈ اور تمام کائونٹیز کو اس تجربے سے حوصلہ ملا ہے اورڈومیسٹک سیزن میں اسے مستقل بنیادوں پر جاری رکھا جائےگا۔میچ دیکھنے والے کم عمر بھی تھے اور عمر رسیدہ بھی ،سب نے خوشی کا اظہار کیا ہے۔
انگلینڈ،پابندی کے باوجود1000تماشائی آج مدعو،،اب کیا ہوگا
انگلینڈ امریکا کے بعد کورونا سے متاثر ہونے والا دوسر ا بدترین ملک ہے لیکن اس کے باوجود اس کے بورڈ نے اپنے 280 ملین پائونڈز بچانے کے لئے کرکٹ سجالی،حالات کی بہتری کے ساتھ تماشائی بھی آگئے،حکومت یکم اکتوبرکے بعد تو انٹر نیشنل اسپورٹس میں بھی تماشائیوں کو بھی اجازت دے دے گی اور کوئی بعید نہیں کہ مسلسل ہونے والے فینز ٹرائل کے بعد پاکستان کے خلاف آخری ٹیسٹ اور ٹی 20 سیریز میں بھی اجازت مل جائے۔
ورلڈ کپ 2023بھی ملتوی ہوگا،کرک سین کی 62روزہ پرانی خبرسچ
آسٹریلیا کے حالات تو اس ملک سے بہتر تھے اورہیں،ورلڈ ٹی 20 تو 18 اکتوبر سے شیڈول تھا،انگلینڈ خراب حالات کے باوجود ویسٹ انڈیز،پاکستان،آئرلینڈ،آسٹریلیا اور جنوبی افریقا ویمنز ٹیم کے کھلاڑیوں و آفیشلز کے ساتھ ساتھ 18 کائونٹیز کے 500سے زائد افراد کو لے کر اپنا سیزن مشکل ترین وقت میں اسٹیج کرسکتا ہے تو آسٹریلیا بعد کے اچھے حالات میں جس کا روشن امکان ہے ،15 ٹیموں کے 400سے بھی کم افراد کے ایونٹس سے کیوں فرار ہوا۔بھارت متحدہ عرب امارات میں 8 ٹیموں کے300سے زائد کھلاڑی و آفیشلز کے ساتھ 51 روزہ میلہ وہ بھی 60 میچزکے ساتھ سجانے جارہا ہے تو ورلڈ ٹی 20 میں کیا مسئلہ تھا؟
ورلڈ ٹی 20 ملتوی ہوہی گیا،ورلڈ کپ 2023بھی متاثر
26 جولائی اتوار کی صبح ساڑھے 10 بجے جب اوول میں کرکٹ تماشائی داخل ہونا شروع ہوئے تھے تو دبئی میں موجود آئی سی سی ہیڈ کوارٹرنے کچھ محسوس تو کیا ہوگا؟
آسٹریلیا میں موجود کرکٹ آفیشلز و غیر جانبدار مبصرین نے کچھ سوچا تو ہوگا؟
دنیا جانتی ہے کہ یہ سب کیوں ہوا،کرک سین 4 ماہ سے مسلسل نشاندہی کر رہا تھا،انضمام سمیت کچھ سابق کرکٹرز 3 ہفتے قبل بولے تھے لیکن ورلڈ ٹی 20 التوا کے بعد سے سب خاموش ہیں،کیا سب ہی سوچوں میں گم ہیں؟

اپنا تبصرہ بھیجیں