وکٹ کیپر آئی سی سی کا چیف ایگزیکٹو،جاوید میاں داد اور 5ویں ڈبل سنچری

عمران عثمانی

کرکٹ کی تاریخ میں ایسا پہلی ہی بار ہوا جب ایک وکٹ کیپر بیٹسمین انٹر نیشنل کرکٹ کونسل کا چیف ایگزیکٹو آفیسر بن گیا۔جی ہاں،16ستمبر 1959کو پیدا ہونے والے جنوبی افریقا کے وکٹ کیپر ڈیو رچرڈسن نےویسٹ انڈیز کے خلاف برج ٹائون میں جب ٹیسٹ ڈیبییو کیا تو یہ 1992 کا سال تھا،آسٹریلیا کے خلاف ایڈیلیڈ کے 1998ٹیسٹ میں ان کے کیریئر پر طویل فارمیٹ کا فل اسٹاپ لگ گیا،42 ٹیسٹ اور 122 ایک روزہ میچز کا تجربہ رکھنے والے ڈیو رچرڈسن جنوری 2002میں آئی سی سی کے پہلے جنرل منیجر بن گئے،ایک عشرے کے بعد وہ کرکٹ گلوبل باڈی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کے عہدے پر فائز تھے۔یہ کرکٹ کی دنیا میں کسی کرکٹر کے لئے بڑی بات ہے۔
آج ہی کے دن کرکٹ کی تاریخ کے عظیم بیٹسمین جاوید میاں داد نے اپنے کیریئر کی5ویں سنچری مکمل کرلی،کراچی میں 1988کے ٹیسٹ میں وہ آسٹریلیا کے خلاف پاکستان کے کپتان بھی تھے،15ستمبر سے شروع ہونے والے ٹیسٹ میچ کے دوسرے روز یعنی آج کے دن 16ستمبر کو انہوں نے 211رنزکی اننگ کھیلی،یہ ٹیسٹ کرکٹ میں ان کی 5ویں ڈبل سنچری بھی تھی،بعد میں پاکستان یہ ٹیسٹ اننگ اور 188رنزسے جیت گیا تھا،اہم بات یہ بھی رہی کہ جاوید میاں دادنے کیریئر کا آخری ٹیسٹ اس کے 5 سال بعد 1993میں کھیلا اور ایک ڈبل سنچری اور بھی بنائی ۔
گویا 16 ستمبر 1988جاوید میاں داد کی 6 ڈبل سنچریز پر فل اسٹاپ کا دن نہیں تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں